سائنس میلہ وزارتِ تعلیم قطر — رپورٹ: مراد علی شاہد دوحہ قطر

کسی بھی ملک کی سماجی،سائنسی اور معاشی ترقی کا دارومدار اس بات میں مضمر ہوتا ہے کہ وہ قوم یا ملک جدید تحقیقاتی عمل میں کس قدر حصہ لے رہا ہے،معاشی ترقی میں سائنس دراصل کلید کا کردار ادا کرتی ہے۔سائنس میں نت نئے تجربات رونما ہوتے رہتے ہیں جن سے کسی بھی ملک کے لئے واقفیت رکھنا اس لئے بھی ضروری ہوتا ہے کہ نئے اور درپیش چیلنجز سے اسے نپٹنا آ سکے۔
uae urdu

اس سلسلہ میں اس ملک کے ادارے اور وزارت تعلیم اہم کردار ادا کرتے ہیں۔لہذاسائنس اور موجودہ تعلیم کے تقاضوں کو مد نظر رکھتے ہوئے اور تعلیمی میدان میں اپنا آپ منوانے کے لئے وزارتِ تعلیم قطر ہر سال سائنس میلہ کا انعقاد کرتی ہے ۔جس میں قطر کے تمام مقامی و غیر ملکی ممالک حصہ لیتے ہی.
dubai news

یہ میلہ دو حصوں پر مشتمل ہوتا ہے ،پہلے حصہ میں ہر ملک کے سکول اپنے اپنے ادارے میں مختلف موضوعات بشمول سائنس و آرٹس تحقیقاتی مقالہ جات پیش اور ڈسپلے کرتے ہیں ۔ان میں سے جو طلبہ و طالبات پوزیشن کے حقدار ٹھہرائے جاتے ہیں انہیں سپریم ایجوکیشن کونسل کے ذریعے سے وزارت تعلیم قطر کے زیر سایہ منعقدہ تحقیقاتی سائنس میلہ کا حصہ بنا یا جاتا ہے ۔
dubai urdu news

اس سلسلہ میں پاک شمع سکول و کالج کے جناح ہال میں دو روزہ سائنس میلہ منعقد کیا گیا جس میں طلبہ و طالبات نے تین کیٹگری (ابتدائیہ،ثانوی ،اعلی ثانوی)میں اپنے اپنے سپر وائزر کے ساتھ مل کر ریسرچ مکمل کرکے ادارہ ھذا کے مقرر کردہ ججز کے سامنے پیش کیں اور دیگر طلبہ طالبات میں تعلیمی دلچسپی بیدار کرنے کے لئے تمام پراجیکٹس کو ڈسپلے بھی کیا تاکہ وہ طلبہ و طالبات جو اس سال اس پراجیکٹ کا حصہ نہ بن سکے ان میں تعلیمی تحقیقاتی شوق بیدار ہو سکے ۔تمام پراجیکٹس کی معاونت ڈاکٹر امجد علی نے سر انجام دی۔
uae urdu news

ججز کے فرائض کی ادائیگی کے لئے بھی انتظامیہ نے انہیں دوحصوں میں تقسیم کیا تاکہ سائنس اور آرٹس کے پراجیکٹس کو الگ الگ جج کیا جا سکے،شعبہ سائنس میں سینئر مدرس اقبال موہل،محمد رفیق صدر شعبہ فزکس اور محمد کامران نے ججز کے فرائض سر انجام دئے جبکہ شعبہ آرٹس میں مظفر حسین صدر شعبہ انگریزی،محمد صفدر اور مسز عظمی نے اپنی اپنی ذمہ داریوں کو بخوبی سر انجام دیا۔پراجیکٹس کی نمائش کے اختتام پر ایک مختصر تقریب کا انعقاد بھی کیا گیا،جس کا آغاز تلاوت قرآن مجید سے کیا گیا جس کی سعادت سال دوم کے طالب علم محمد طلحہ نے حاصل کی جبکہ کمپئیرنگ کے فرائض امجد علی نے سر انجام دئے۔ کلمات تحسین پیش کرتے ہوئے مینجنگ ڈائریکٹر ایم اے شاہدؔ اور پرنسپل نبیلہ کوکب نے کہا کہ ادارے کی ہمیشہ سے کوشش رہی ہے کہ سلیبس سے ہٹ کر ایسی سرگرمیوں کی حوصلہ افزائی کی جائے جس کا تعلق تعلیم،تحقیق اور ثقافت سے ہو،اس سلسلہ میں ادارہ یقیناًوزارت تعلیم قطر کا مشکور ہے کہ جو گذشتہ دس سال سے یہ تحقیقاتی میلہ باقاعدگی سے منعقد کروا رہا ہے کہ جس سے بچوں میں مقالہ لکھنے اور مقابلہ کرنے کا رجحان پیدا ہو رہا ہے۔اور ہمیں امید ہے کہ یہ تحقیق کا عمل آنے والے سالوں میں یونیورسٹی تعلیم میں ان بچوں کے ضرور کام آئے گا۔ پروگرام کے اختتام پر پوزیشن حاصل کرنے والے طلبہ و طالبات میں سند تحسین پیش کی گئیں۔
urdu columns

اپنا تبصرہ بھیجیں