GDRFA Approval

میرا یو اے ای وزٹ ویزہ ایکسپائر ہو گیا ہے، اب کیا کرنا ہو گا؟

دبئی ( یو اے ای اردو – 5 ستمبر 2021 – ارشد فاروق بٹ) عالمی وبا کوویڈ 19 کے پھیلاؤ کے باعث متحدہ عرب امارات نے رواں برس پاکستان سمیت کئی ممالک کے شہریوں پر سفری پابندیاں عائد کر دی تھیں جس کے باعث بے شمار مسافروں کے وزٹ ویزے ایکسپائر ہو گئے ہیں. ایسے مسافرجو پروازیں بند ہونے کے باعث یو اے ای سفر نہیں کرسکے، کیا کوئی آپشن ہے؟

جواب: ایسے تمام مسافروں کے لیے تین آپشن ہیں.

1. ایسے تمام وزٹ ویزہ ہولڈرز کو جنرل ڈائریکٹوریٹ آف ریزیڈنسی اینڈ فارنرز افیئرز (جی ڈی آر ایف اے ) سے رابطہ کرنا چاہیے تاکہ ان کا سٹیٹس گرین ہو سکے.
2. وزٹ ویزہ کے شیڈول میں تبدیلی کے لیے سفارت خانے سے رابطہ کریں.
3. مندرجہ بالا دونوں آپشن میں اگر ناکامی ہو تو نئے ویزے کے لیے اپلائی کریں. نیا ویزہ 7 سو درہم سے لے 8 سو درہم تک مل جائے گا.

گزشتہ برس یہی مسئلہ دبئی حکومت کو درپیش تھا. جنرل ڈائریکٹوریٹ آف ریزیڈنسی اینڈ فارنرز افیئرز (جی ڈی آر ایف اے ) دبئی نے اپنی ویب سائٹ پر لوگوں کی طرف سے پوچھے گئے سوالات پر کہا تھا کہ تمام وزٹ ویزوں میں 31 دسمبر 2020 تک توسیع کی گئی ہے اور کسی بھی زمرے کے لیے کوئی جرمانہ نہیں ہے ، ہر قسم کے وزٹ ویزے کے حاملین کے لیے ضروری ہے کہ وہ اپنے ملکوں کے سفارت خانے سے رابطہ کریں تاکہ ان کی متحدہ عرب امارات روانگی میں آسانی ہو۔

GDRFA FAQs

تاہم رواں برس ابھی تک جی ڈی آر ایف اے کی جانب سے ایسا کوئی بیان سامنے نہیں آیا. صرف ریزیڈنشل ویزہ ہولڈرز کی آسانی کے لیے ان کے ویزوں میں دسمبر 2021 تک توسیع کر دی گئی ہے. ایکسپائرڈ وزٹ ویزہ ہولڈرز کے لیے ابھی تک کوئی پالیسی سامنے نہیں آئی.

واضح رہے کہ ویزہ کے حصول کے بعد سفر کی دیگر شرائط وہی ہیں جو پہلے سے طے شدہ ہیں. جس میں مسافروں کو 48 گھنٹوں کے اندر کیے جانے والے کووڈ ٹیسٹ کے لیے منفی پی سی آر سرٹیفکیٹ پیش کرنے کی ضرورت ہو گی اور روانگی سے 6 گھنٹوں کے اندر ریپڈ پی سی آر ٹیسٹ کروانا ہو گا جو کہ ایئرپورٹ کے اندر ہوگا.

ایڈیٹر ارشد فاروق

ارشد فاروق
ارشد فاروق بٹ کالم نگار اور بلاگر ہیں۔ یو اے ای اردو ویب سائٹ پر آپ ویزہ گائیڈ اور اردو نیوز کی کیٹیگری اپڈیٹ کرتے ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے