uae visa guide

یو اے ای حکومت نے پاکستانیوں کے ورک پرمٹ اور ویزوں کی توسیع کا اعلان کر دیا – UAE URDU

دبئی (یو اے ای اردو – 30 جولائی 2021 – ارشد فاروق بٹ) متحدہ عرب امارات کی حکومت نے پاکستان میں پھنسے ایسے تارکین وطن جو پروازیں بند ہونے کی وجہ سے متحدہ عرب امارات نہیں آ پا رہے، انکو خوشخبری سنا دی ہے. ایسے پاکستانیوں کیے ورک پرمٹ اور ویزوں کی توسیع کا اعلان کرتے ہوئے یو اے ای حکومت کا کہنا ہے کہ سپانسرز اور کمپنی کے ذریعے ایسا ممکن ہے. حال ہی میں دبئی حکومت نے ایکسپائر ہونے والے ویزوں میں تین ماہ کی توسیع کر دی ہے

تفصیلات کے مطابق متحدہ عرب امارات میں پاکستان کے سفیر افضال محمود نے 27 جولائی 2021 کو متحدہ عرب امارات کی منسٹری آف ہیومن ریسورس اینڈ ایمریٹائزیشن کے اعلی عہدیداروں سے ایک مفصل ملاقات کی جس میں انہوں نے ان پاکستانیوں کے ورک پرمٹ اور ویزوں میں توسیع کے سلسلے میں تعاون کی درخواست کی جو پروازوں کی معطلی کی وجہ سے امارات واپس سفر نہیں کر پا رہے۔

اماراتی حکام کی جانب سے سفیر پاکستان افضال محمود کو مطلع کیا گیا کہ جو پاکستانی پروازوں کی معطلی کی وجہ سے امارات نہیں آپا رہے، وہ اپنے اسپانسرز یا کمپنی کے ذریے اپنے ورک پرمٹ اور ویزوں کی توسیع کرواسکتے ہیں۔

مزید کہا گیا ہے کہ ویزوں کی منسوخی کے لئے کارکنان لیبر منسٹری میں درخواست دے سکتے ہیں جو دو ہفتوں میں منسوخی کی منظوری دے دیتی ہے۔ مزید بر آں سفیر پاکستان سے درخواست کی گئی کہ وہ ویزہ منسوخی کے خواہش مند متاثرہ پاکستانیوں کو ہدایت کریں کہ وہ مندرجہ ذیل رابطہ نمبروں کے ذریعے لیبر منسٹری سے رابطہ کریں:

  1. 24 گھنٹے ٹول فری ٹیلیفون نمبر: 00971800600
  2. لیبر کلیمز اینڈ ایڈوائزری سینٹر: 0097146659999 دبئی
  3. اینجاز : مرینا مال ابوظہبی : 0097122031004 ، العین مال : 0097122031002

متحدہ عرب امارات میں تارکین وطن پاکستانیوں کو ہدایت کی جاتی ہے کہ لیبر منسٹری اور اسپانسرز کے بارے میں کسی قسم کی شکایات لیبر منسٹری کے ساتھ مندرجہ بالا نمبروں پر درج کرواسکتے ہیں۔ مزید کسی قسم کے تعاون کے لئے سفارت خانہ کے ساتھ بھی درج ذیل ای میل پر رابطہ کیا جاسکتا ہے:
complaints@pakistanembassyuae.org

press release by pakistan embassy uae

ایڈیٹر ارشد فاروق

ارشد فاروق
ارشد فاروق بٹ کالم نگار اور بلاگر ہیں۔ یو اے ای اردو ویب سائٹ پر آپ ویزہ گائیڈ اور اردو نیوز کی کیٹیگری اپڈیٹ کرتے ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے