visa expired dubai

اگر آپ کا یو اے ای اقامتی ویزہ ایکسپائر ہو رہا ہے تو کیا کرنا چاہیے؟

دبئی ( یو اے ای اردو – 15 جولائی 2021 – ارشد فاروق بٹ) پاکستان میں موجود بہت سے مسافر جن کے پاس متحدہ عرب امارات کا ورک ویزہ ہے، اور وہ یو اے ای کی جانب سے لگائی گئی سفری پابندیوں سے سخت پریشان ہیں۔ کئی مسافروں کا ویزہ پروازیں کھلنے سے پہلے ایکسپائر ہو گیا ہے اور اکثر مسافروں کا ویزہ عنقریب ایکسپائر ہو رہا ہے۔ ان مسافروں کے پاس کیا کوئی آپشن ہے؟

سال 2020 میں یہی مسئلہ بہت سے پاکستانی مسافروں کو درپیش تھا جن کے پاس یو اے ای کا اقامتی یا وزٹ ویزہ تھا۔ وبائی مرض کرونا کی وجہ سے مسافر پروازوں پر پابندی تھی جس کی وجہ سے کچھ لوگوں کے ویزے ایکسپائر ہو گئے تھے۔

اس مسئلے کے حل کے لیے متحدہ عرب امارات کی وفاقی اتھارٹی برائے شناخت اور شہریت (آئی سی اے) نے ایکسپائر ویزہ کے حامل پاکستانی شہریوں کو اضافی مدت دیتے ہوئے پابند کیا تھا کہ دیے گئے عرصے کے اندر اندر متحدہ عرب امارات پہنچ جائیں۔

اب جبکہ سال 2021 ہے، دبئی کے ایسے تارکین وطن ، جو کوویڈ 19 سفری پابندیوں کے دوران یو اے ای سے باہر پھنسے ہوئے تھے ، ان کے رہائشی ویزوں میں 9 دسمبر 2021 تک توسیع دی گئی ہے۔

میعاد ختم ہونے والے ان ویزوں میں یہ توسیع تین ماہ کے لیے دی گئی ہے. جس میں دوبارہ درخواست دینے کے لیے ایک ماہ کی مہلت شامل ہے. جو تارکین وطن متحدہ عرب امارات واپس آنا چاہتے ہیں وہ اپنے ویزہ کا سٹیٹس نیچے دیے گئے لنک سے چیک کر سکتے ہیں.

جنرل ڈائریکٹوریٹ آف ریزیڈنسی اینڈ فارنرز افیئرز

تمام پاکستانی تارکین وطن جن کے پاس دبئی کا ویزہ ہے ان کو اب ویزہ کا سٹیٹس گرین نظر آئے گا. اس کے بعد اگلا مرحلہ جی ڈی آر ایف اے سے پری ٹریول منظوری کا ہے. جس کے لیے درج ذیل پوسٹ پڑھیں.

جی ڈی آر ایف اے دبئی میں ویزہ کی پری انٹری منظوری کے لیے درخواست کیسے دیں؟

ویزوں میں یہ خودکار توسیع صرف دبئی کے رہائشی ویزا رکھنے والوں کو دی گئی ہے۔ ایسے تارکین وطن جو متحدہ عرب امارات سے چھ ماہ سے زائد عرصے تک باہر رہے ہیں وہ بھی واپس آ سکتے ہیں۔ دیگر امارات یعنی ابوظہبی، شارجہ وغیرہ کے ویزہ ہولڈرز کے لیے ہدایات ابھی واضح نہیں ہیں.

اس کالم کے شائع ہونے تک متحدہ عرب امارات نے پاکستان میں پھنسے ہوئے افراد جن کے پاس دبئی کے علاوہ کسی اور امارت کا ویزہ ہے ان کے لیے کسی اضافی مدت کا سرکاری طور پر اعلان نہیں کیا۔ اس صورتحال میں یا تو آپکو پالیسی کا انتظار کرنا چاہئے اور متحدہ عرب امارات سے سال 2020 کی طرح کسی رعایتی اضافی مدت کی امید رکھنی چاہئے۔

ویزہ کینسل کرانے کا طریقہ

ویزہ کینسل کرنے کے لیے آپ دبئی میں جنرل دائریکٹوریٹ آف ریزیڈنسی اینڈ فارن افیئرز سے رابطہ کرسکتے ہیں یا اپنے سپانسر یا کمپنی سے رابطہ کریں۔ ویزہ کینسل اس زمرے کے تحت کیا جائے گا کہ آپ یو اے ای سے باہر رہے ہیں اور پروازیں بند ہونے کے باعث واپس نہیں آ سکتے۔

فالو اپ:
ہمارے فیس بک پیج پر موجود ایک قاری جن کے پاس ابوظہبی کا ویزہ تھا اور ان کو یو اے ای میں ویکسین لگی تھی اور ان کو پاکستان میں پھنسے چھ ماہ سے زائد ہو گئے تھے. انہوں نے پوچھا تھا کہ اب وہ واپس جا سکتے ہیں یا نہیں.

ان کی مدد کے لیے ہم نے سب سے پہلے ان کا ویزہ سٹیٹس چیک کیا جو کہ Valid تھا. ہم نے آئی سی اے سے پری انٹری اپروول لی جس کے بعد ان کا سٹیٹس گرین آ گیا. اب وہ 22 اگست کو ابوظہبی واپس جا رہے ہیں.

Dubai pre entry approval

ایڈیٹر ارشد فاروق

ارشد فاروق
ارشد فاروق بٹ کالم نگار اور بلاگر ہیں۔ یو اے ای اردو ویب سائٹ پر آپ ویزہ گائیڈ اور اردو نیوز کی کیٹیگری اپڈیٹ کرتے ہیں۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔